Sunday, September 27, 2020
Home How To How to Perform Hajj – A Spiritual Pilgrimage

How to Perform Hajj – A Spiritual Pilgrimage

Hajj is the fifth and last pillar of Islam out of five basic pillars. It is compulsory for such Muslims, who are wealthy and they have complete resources to reach Mecca and perform this basic worship of Allah. Every adult Muslim, who is physically and mentally capable of performing Hajj, is obligated to do it minimum once in his / her lifetime. You need to learn How to Perform Hajj – A Spiritual Pilgrimage.

Muslims all over the world gather in the holy city of Mecca and they worship Allah and perform Hajj on 09th of Zilhaj, which is performed in the commemoration of the great prophets of God, Hazrat Ibrahim and Hazrat Ismail. This prayer is performed on the particular dates and the Muslims have to perform the complete set of worships during these days and they also slaughter the animals in commemoration of the great sacrifice of Hazrat Imail.

Can You Perform Hajj?

Now the Muslims all over the world can have the modern facilities to reach to this holy city of Mecca. The Muslims need to study the basic rituals of the pilgrimage and clear their minds of the worldly distractions and repent to the content of their hearts. They must have the belief that Allah will forgive their sins by the time, when they arrive at Mecca. The Muslims, who have enough financial resources that they can bear all financial expenses during this journey and they can slaughter the animals, the performing of Hajj become obligatory for them. 

How to Perform Hajj / The Type of Hajj to Undertake

According to the Islamic rules and regulations, Muslims have three options to perform hajj. There is slight difference in terms of rituals in each option and the time line is also varied. The three types of hajj are given as under:

  • Tamattu. This type of hajj is most common form of pilgrimage and the Holy Prophet (Peace and blessings of Allah be upon him) recommended it. In involve the pilgrim to perform the rituals of minor pilgrimage ritual, which is known as Umrah. The Muslims, who perform this type of Hajj, Tamattu, they are called Mutamatti.
  • Qiran.  The pilgrims perform the rites of both Umrah and Hajj in this option and there is no break in the middle. The pilgrims, who perform Qiran are called Qaarin.
  • Ifraad. In this type of pilgrim, the rites of hajj are performed but not of the umrah. It is notable for being only one that does need the sacrifice of the animal. Pilgrims, who perform Ifraad, they are called Mufrid.

Plan Your Journey to Saudi Arabia

This entire pilgrimage is performed in Mecca and the pilgrims need to get the necessary documents including passport, travel documents, tickets and they need to apply, when the hajj  applications are demanded by the government.

  • The Hajj is performed from 8th to 12th Zilhaj, which is the 12th and last month of the Islamic calendar. The days of hajj are changed every year because, Islamic calendar is the lunar calendar. You need to provide all necessary documents to the government to get stamped the hajj visa from the Saudi embassy and get booked the seats in the airlines. On approaching that day, you will leave for Mecca to perform Hajj.
  • The pilgrims need to have the visa duly stamp on their passports, complete application forms, copies of marriage or birth certificate and up to date immunization record.  
  • The pilgrims travel in groups to perform hajj, which shows their solidarity and they contact with their family and friends, who are also making plan to perform hajj this year. 

Prepare To Be Basked in Religion – And Complications

When you start the journey to perform pilgrimage, Saudi government set the rules for personal conduct including, who must be in company with the Mahran, any related and close relationship with a man, including father, brother, husband, son, nephew, uncle or approved individual according to the Islamic rules. The women, whose age is over 45 years and they are part of large group, they can perform hajj without Mahram and they must have letter of consent from her husband.

Rites of Umrah

Assume Ihram. Ihram is the holy state of the purity and all pilgrims must assume before starting the performing of rites of Umrah and Hajj. Ihram needs certain physical actions and behavioral changes. You need a particular style of dress and make the intention to perform this great prayer and recite Talbiyah. The ihram for men and women are different.     

  • Men. Shave, comb hair, trim of shape facial hair, cut hair nails and remove unwanted body hair. They need to take a bath or perform ablution with intention of ihram but do not apply the artificial fragrance and sincerely repent on his sins.
    • Wear neat and clean ihram sheets, wrap one around waist and wear the other over upper body. Wear simple sandals or flip flops to cover the top portion of your foot. They do not cover their head with any type of cap or other cloth and this simple garments show the equality of all before God. 
  • Women. They also shave and groom themselves, bathe but do not need to apply scents. They also avoid using makeup or other cosmetics and they should wear the ordinary clothe, that need to be clean and modest.
    • It is mandatory for the women to cover their heads with veil, scarf and cover the whole body parts but let uncovered the whole face.

How To Perform Hajj / Declaration – Intention and Talbiyah

There is the special boundary, which is called Miqat and it surrounds the holy sites of Hajj. The pilgrims cannot cross this boundary without wearing Ihram. There are six historical entry points of Miqat and when you reach one of them, pronounce the Niyyah, the short recitation of his intention to complete umrah. They start reciting the Talbiyah, which will be repeated often during the pilgrimage. The words of Talbuyah are:

  • “Here I am O Allah, (in response to Your call), here I am. Here I am, You have no partner, here I am. Verily all praise, grace and sovereignty belong to You. You have no partner.
  • If he or she does not enter into state of Ihram, the pilgrim must wear the ihram and make intention before crossing Miqat.

How to Perform Hajj / Tawaf – The Holy Ka’abah

When you enter in Ka’abah, keep your eyes fixed on it and stand at one side of crowd and say ‘Allah o Akbar’ three times and say first kalmia and say other verses. Say blessings on the Holy Prophet (Peace Be Upon Him) and after that pray to Allah with total humility. This is the time of acceptance and closeness to Allah.

Perform tawaf in anti-clock wise around Ka’abah. All should face the Ka’abah and the black stone is on your right side.

  • Begin to move to right and come close to black stone and if it is possible, kiss it. If you cannot kiss it, you may touch it with your hands. If you cannot kiss or touch it, lift your hands to your ears and palms facing Black Stone and recite short prayer.
  • Begin to circle Ka’abah and walk counter clockwise staying at Ka’abah at your left. Move in circle around Ka’abah seven times and praying. There is no designated prayer for Tawaf and you can simply pray from your heart. When you reach to the Black Stone, point at the stone each time.  
  • When you complete seven circles around Ka’abah, finish it and men can cover their right shoulder.

Perform Sa’ey

Sa’ey means the ‘seeking’ or ‘ritual walking’, which is simply described as walking forth and back seven times between the hills of Safa and Marwah, which are located at the south and north of Ka’abah.

  • When you reach top of Safa, recite Niyyah and face Ka’abah to recite ‘Allah o Akbar’ three times and add additional prayers, which you want and proceed to Marwah.
  • When you reach Marwah, recite the niyyah and add the prayer you want. At the top of Marwah, repeat ‘Allah o Akbar’ while facing Ka’abah and walk down from the hill.
  • When you walk forth and back seven times of these two holy mountains, you are finished.

Declaration of Intention to Perform Hajj

Most of the pilgrims perform their Tamattu pilgrimage having several day break between the Umrah and Hajj duties. The rites of hajj last for 5 days from 8th to 12th of Zilhaj. But you must maintain ihram for three days.

Head to Mina

On the first night, there is no major ritual and you may spend time praying and reflecting with other pilgrims if you wish. Various pilgrims offer the Dhuhr, Asr, Magrib, Isha and Fajr prayers.

Men and women stay in separate tents in Mina, which are located adjacent to each other. There are thousands of the husbands and wives but men are not allowed to enter the tents of women.

Head to Arafat

Pilgrims travel to Arafat on the second day for Waquf and there is no specific prayers assigned for Waquf and they simply pray to Allah. Many people spend their time reflecting on course of their life, future and their place in the world.

Then they move to Muzdalifah, which is between Mina and Arafat and proceed to prayer. In the morning time, collect stones for stoning ceremony and you know that this ceremony can be crowded, tense and emotional. The elderly, sick and injured persons are discouraged to participate in it. They delay it and perform it later in the evening or they have their friends or confident to perform this ritual in their place.

Animal Sacrifice

After performing the stoning ceremony, people offer Qurbani to Allah or the sacrifice of the animals and it can be done on 10th, 11th and 12th day of Zilhaj.

Repeat Ramy on 4th and 5th days

You must participate in stoning ritual in Mina but this time, you will not throw stones at Jamrat Al Aqabah but on two other monuments, Jamrat Oolah, (first jamrat) and Jamrat Wustah (middle jamrat).

  • Throw pebbles at Jarmat Olah and praise Allah and supplicate with your raised hands and you can recite any prayer. You will repeat it for the Jamrat Wustah and finally throw stones at Jamrat Al Aqabah and after that you do not need to pray and return home.
  • Repeat this ritual after sundown on 5th day.

Finally Farewell Tawaf

Farewell tawaf is the final tawal and walk around Ka’abah for seven times and in this final period, reflect and repent, pray and praise and perform dua your loved ones.

Later

  • After performing Hajj, many pilgrims go to Medina, which is the second holiest city is Islam. People can visit to the holy site of the Prophet’s mosque. No Ihram is required to visit this holy city of Medina.
  • The foreign pilgrims leave Saudi Arabia by 10th of Moharram and the hajj operation is completed.

حج کیسے ادا کریں – ایک روحانی سفر

حج پانچ بنیادی ستونوں میں سے اسلام کا پانچواں اور آخری ستون ہے۔ ایسے مسلمان ، جو صاحب حیثیست ہیں اور ان کے پاس اللہ کی اس بنیادی عبادت کو پورا کرنے کے لئے مکمل وسائل ہیں ، ان کے لئے لازمی ہے۔ ہر بالغ مسلمان ، جو جسمانی اور ذہنی طور پر حج ادا کرنے کے قابل ہے ، اپنی زندگی میں کم سے کم ایک بار اس کا پابند ہے۔ آپ کو حج ادا کرنے کا طریقہ سیکھنے کی ضرورت ہے۔

پوری دنیا کے مسلمان مقدس شہر مکہ مکرمہ میں جمع ہوتے ہیں اور وہ اللہ کی عبادت کرتے ہیں اور 9 ذوالحج کو حج ادا کرتے ہیں ، جو خدا کے انبیاء ، حضرت ابراہیم اور حضرت اسماعیل کی یاد میں ادا کیا جاتا ہے۔ یہ دعا مخصوص تاریخوں پر ادا کی جاتی ہے اور مسلمانوں کو ان ایام میں عبادتوں کو مکمل سیٹ کرنا پڑتا ہے اور وہ حضرت اسماعیل کی عظیم قربانی کی یاد میں جانوروں کو ذبح بھی کرتے ہیں۔

کیا آپ حج ادا کرسکتے ہیں؟

اب پوری دنیا کے مسلمان مکہ کے اس مقدس شہر تک پہنچنے کے لئے جدید سہولیات حاصل کرسکتے ہیں۔ مسلمانوں کو زیارت کی بنیادی رسومات کا مطالعہ کرنے اور دنیاوی خلفشار سے اپنے ذہنوں کو صاف کرنے اور اپنے دلوں کے مشمولات پر توبہ کرنے کی ضرورت ہے۔ انھیں یہ یقین ہونا چاہئے کہ جب تک وہ مکہ پہنچیں گے اللہ ان کے گناہوں کو معاف کردے گا۔ مسلمان ، جن کے پاس اتنے مالی وسائل موجود ہیں کہ وہ اس سفر کے دوران تمام مالی اخراجات برداشت کرسکتے ہیں اور وہ جانوروں کو ذبح کرسکتے ہیں ، حج کی ادائیگی ان پر واجب ہوجاتی ہے۔

حج انجام دینے کا طریقہ / انجام دینے کے لئے حج کی قسم

اسلامی قواعد و ضوابط کے مطابق ، حج کے لئے مسلمانوں کے پاس تین اختیارات ہیں۔ ہر آپشن میں رسومات کے معاملے میں تھوڑا سا فرق ہوتا ہے اور ٹائم لائن بھی مختلف ہوتی ہے۔ حج کی تین اقسام ذیل میں دی گئی ہیں۔

تماٹو حج کی اس قسم کی زیارت کی ایک عام شکل ہے اور آنحضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم نے اس کی سفارش کی ہے۔ حاجی کو معمولی حج کی رسم ادا کرنے کے لئے شامل کرنا ، جسے عمرہ کیا جاتا ہے۔ مسلمان ، جو اس طرح کے حج ، تمتو کو ادا کرتے ہیں ، انہیں مطعمی کہا جاتا ہے۔

قیران۔ زائرین اس اختیار میں عمرہ اور حج دونوں کی رسومات ادا کرتے ہیں اور درمیان میں کوئی وقفہ نہیں ہوتا ہے۔ زائرین ، جو قران پڑھتے ہیں ، انہیں قارین کہتے ہیں۔

افراڈ۔ اس قسم کے حاجی میں ، حج کی رسم ادا کی جاتی ہے لیکن عمرہ کی نہیں۔ یہ صرف ایک ہونے کے لئے قابل ذکر ہے جسے جانور کی قربانی کی ضرورت ہے۔ عازمین جو افطاری کرتے ہیں ، انھیں مفریڈ کہا جاتا ہے۔

سعودی عرب جانے کا منصوبہ بنائیں

یہ پوری یاترا مکہ مکرمہ میں ادا کی جاتی ہے اور حجاج کو پاسپورٹ ، سفری دستاویزات ، ٹکٹوں سمیت ضروری دستاویزات حاصل کرنے کی ضرورت ہوتی ہے اور انہیں درخواست دینے کی ضرورت ہوتی ہے ، جب حکومت سے حج درخواستوں کا مطالبہ کیا جاتا ہے۔

حج آٹھ سے بارہ ذی الحجہ تک ادا کیا جاتا ہے ، جو اسلامی تقویم کا 12 واں اور آخری مہینہ ہے۔ حج کے دن ہر سال تبدیل ہوجاتے ہیں کیونکہ ، اسلامی تقویم قمری تقویم ہے۔ سعودی سفارت خانے سے حج ویزا حاصل کرنے اور ایئر لائنز میں سیٹیں بک کروانے کے لیے آپ کو حکومت کو تمام ضروری دستاویزات فراہم کرنے کی ضرورت ہے۔ اس دن کے قریب پہنچ کر ، آپ حج کے لئے مکہ روانہ ہوں گے۔

حجاج کرام کو ویزا پاسپورٹ ، مکمل درخواست فارم ، شادی یا پیدائشی سرٹیفکیٹ کی کاپیاں اور تازہ حفاظتی ٹیکوں کے ریکارڈ پر ڈاک ٹکٹ ہونا ضروری ہے۔

عازمین حج گروہوں میں سفر کرتے ہیں ، جو ان سے اظہار یکجہتی کرتے ہیں اور وہ اپنے کنبہ اور دوستوں سے رابطہ کرتے ہیں ، جو اس سال حج کرنے کا منصوبہ بھی بنا رہے ہیں۔

پیش قدمی کرنے کے لئے تیار کریں

جب آپ زیارت کے لئے سفر شروع کرتے ہیں تو ، سعودی حکومت نے ذاتی طرز عمل کے لئے قواعد طے کردیئے ہیں ، جن میں مہران کے ساتھ رہنا لازمی ہے ، باپ ، بھائی ، شوہر ، بیٹے ، بھتیجے ، چچا سمیت کسی شخص کے ساتھ کوئی بھی متعلقہ اور قریبی رشتہ ہونا چاہئے۔ اسلامی قوانین کے مطابق فرد کی منظوری دی گئی۔ وہ خواتین ، جن کی عمر 45 سال سے زیادہ ہے اور وہ بڑے گروپ میں شامل ہیں ، وہ محرم کے بغیر حج کرسکتی ہیں اور ان کے پاس اس کے شوہر کی رضامندی کا خط ہونا ضروری ہے۔

عمرہ کی رسومات

احرام فرض کریں۔ احرام پاک کی مقدس ریاست ہے اور تمام عازمین کو عمرہ اور حج کی ادائیگی شروع کرنے سے پہلے فرض کرنا چاہئے۔ احرام کو کچھ جسمانی اعمال اور طرز عمل میں تبدیلی کی ضرورت ہے۔ آپ کو ایک خاص انداز کے لباس کی ضرورت ہے اور اس عظیم نماز کو ادا کرنے اور تلبیہ پڑھنے کا ارادہ کریں۔ مرد اور عورت کے لئے احرام الگ الگ ہیں۔

مرد۔ مونڈنے ، کنگھی کرنے والے بالوں ، چہرے کے بالوں کی شکل تراشنا ، ناخن کاٹنے اور جسمانی ناپسندیدہ بالوں کو ختم کرنا۔ انہیں احرام کی نیت سے غسل کرنے یا وضو کرنے کی ضرورت ہے لیکن مصنوعی خوشبو نہیں لگاتے اور اس کے گناہوں پر خلوص دل سے توبہ کرتے ہیں۔

صاف ستھرا احرام چادر پہنیں ، ایک کو کمر کے گرد لپیٹیں اور دوسری کو اوپری جسم پر پہنیں۔ اپنے پیر کے اوپری حصے کو ڈھکنے کے لئے سادہ سینڈل یا پلٹائیں فلاپ پہنیں۔ وہ کسی بھی طرح کی ٹوپی یا دوسرے کپڑے سے اپنے سر کو نہیں ڈھکاتے ہیں اور یہ سادہ لباس خدا کے سامنے سب کی برابری ظاہر کرتا ہے۔

خواتین۔ وہ خود کو صاف ستھرا رکھتی ہیں ، نہاتی ییں لیکن خوشبو لگانے کی ضرورت نہیں ہے۔ وہ میک اپ یا دیگر کاسمیٹکس کا استعمال کرنے سے بھی گریز کرتی ہیں اور انہیں عام لباس پہننا چاہئے ، اس کو صاف ستھرا اور اعتدال پسند ہونا چاہئے۔

خواتین کے لئے لازم ہے کہ وہ اپنے سر کو پردے ، سکارف سے ڈھانپیں اور جسم کے پورے حصوں کو ڈھانپ دیں لیکن پورے چہرے کو بے نقاب رکھیں-

حج / اعلامیہ انجام دینے کا طریقہ۔ ارادہ اور تلبیہ

یہاں ایک خاص حد ہے ، جسے میقات کہا جاتا ہے اور یہ حج کے مقدس مقامات کے چاروں طرف ہے۔ حجاج احرام باندھے بغیر اس حد سے تجاوز نہیں کرسکتے ہیں۔ میقات کے چھ تاریخی اندراج والے مقامات ہیں اور جب آپ ان میں سے کسی ایک تک پہنچتے ہیں تو ، نحی. کا اعلان کریں ، عمرہ کے مکمل ارادے کی مختصر تلاوت۔ وہ تلبیہ کی تلاوت کرنا شروع کرتے ہیں ، جو زیارت کے دوران اکثر دہرائے جاتے ہیں۔ تلبیہ کے الفاظ یہ ہیں:

“یہ میں ہوں اللہ ، (تمہارے اذان کے جواب میں) ، میں حاضر ہوں۔ میں ہوں ، آپ کا کوئی شریک نہیں ، میں ہوں۔ بے شک تمام تعریفیں ، فضل اور خودمختاری آپ کی ہے۔ آپ کا کوئی شریک نہیں ہے۔

اگر وہ حالت احرام میں داخل نہیں ہوتا ہے تو ، حاجی کو لازم ہے کہ وہ احرام باندھے اور میقات عبور کرنے سے پہلے اس کی نیت کرے۔

حج / طواف کرنے کا طریقہ – حضور کعبہ

جب آپ خانہ کعبہ میں داخل ہوں تو اس پر نگاہیں رکھیں اور مجمع کے ایک طرف کھڑے ہوں اور ’’ اللہ اے اکبر ‘‘ کو تین بار کہیں اور پہلے کلمیہ کہو اور دوسری آیتیں کہو۔ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر درود کہو اور اس کے بعد اللہ سے پوری عاجزی کے ساتھ دعا کرو۔ یہ وقت اللہ کی قبولیت اور قربت کا ہے۔

طواف کعبہ کے ارد گرد گھڑی وار کے مطابق کریں۔ سب کو کعبہ کا سامنا کرنا چاہئے اور کالا پتھر آپ کی دائیں طرف ہے۔

دائیں طرف جانے لگیں اور کالے پتھر کے قریب آئیں اور اگر ممکن ہو تو اس کو چومیں۔ اگر آپ اسے بوسہ نہیں دے سکتے ہیں تو ، آپ اسے اپنے ہاتھوں سے چھو سکتے ہیں۔ اگر آپ اسے بوسہ بھی نہیں سکتے اور نہ چھونے کے لئے تو اپنے کانوں اور ہتھیلیوں کو کالے پتھر کی طرف اٹھائیں اور مختصر دعا پڑھیں۔

کعبہ کے گردلگانا شروع کریں اور گھماؤ راستے سے اپنے بائیں طرف کعبہ میں قیام کریں۔ دعائے کعبہ کے گرد دائرہ میں سات دفعہ حرکت کریں۔ طواف کے لئے کوئی نامزد نماز نہیں ہے اور آپ آسانی سے اپنے دل سے دعا مانگ سکتے ہیں۔ جب آپ سیاہ پتھر تک پہنچتے ہیں تو ، ہر بار پتھر کی طرف اشارہ کریں۔

جب آپ خانہ کعبہ کے آس پاس سات حلقے مکمل کرتے ہیں تو اسے ختم کریں اور مرد اپنے دائیں کندھے کو ڈھانپ سکتے ہیں۔

سعی پرفارم کریں

ساعی کے معنی ہیں ‘تلاش کرنا’ یا ‘رسمی چلنا’ ، جس کو صاف اور مروہ کی پہاڑیوں کے درمیان سات بار آگے پیچھے پیچھے جانا بتایا جاتا ہے ، جو کعبہ کے جنوب اور شمال میں واقع ہیں۔

جب آپ صفا کی چوٹی پر پہنچیں تو ، تین بار ’’ اللہ اے اکبر ‘‘ کی تلاوت کرنے کے لئے نیہا پڑھیں اور کعبہ کا سامنا کریں اور اضافی دعائیں جو آپ چاہیں اور مروہ کو آگے بڑھیں۔

جب آپ مروہ پہنچیں تو نعت پڑھیں اور جو دعا چاہیں شامل کریں۔ مروہ کی چوٹی پر ، کعبہ کا سامنا کرتے ہوئے ‘اللہ او اکبر’ دہرائیں اور پہاڑی سے نیچے چلے جائیں۔

جب آپ ان دو مقدس پہاڑوں میں سے سات مرتبہ آگے اور پیچھے جاتے ہیں تو ، آپ ختم ہوجاتے ہیں۔

حج کے ارادے کا اعلان

عمرہ اور حج کے فرائض کے درمیان کئی دن کے وقفے کے بعد بیشتر حجاج اپنی تمتو سفر کرتے ہیں۔ حج کی رسومات 8 دن سے 12 تاریخ تک ظلج .ہ تک 5 دن تک جاری رہتی ہیں۔ لیکن آپ کو احرام کو تین دن تک برقرار رکھنا چاہئے۔

مینا کی طرف بڑھیں

پہلی رات ، کوئی بڑی رسم نہیں ہے اور اگر آپ چاہیں تو آپ دوسرے حاجیوں کے ساتھ نماز پڑھنے اور غور کرنے میں وقت گزار سکتے ہیں۔ مختلف حجاج کرام نماز ظہر ، عصر ، مغرب ، عشاء اور فجر کی نماز پڑھتے ہیں۔

مینا میں مرد اور خواتین الگ الگ خیموں میں رہتے ہیں ، جو ایک دوسرے سے متصل ہیں۔ ہزاروں شوہر اور بیویاں ہیں لیکن مردوں کو عورتوں کے خیموں میں جانے کی اجازت نہیں ہے۔

عرفات کی طرف روانہ

حجاج کرام دوسرے دن عرفات کا سفر وقف کے لئے کرتے ہیں اور یہاں وقف کے لئے کوئی خاص نماز مقرر نہیں کی جاتی ہے اور وہ اللہ سے آسانی سے دعا کرتے ہیں۔ بہت سارے لوگ اپنی زندگی ، مستقبل اور دنیا میں ان کے مقام پر غور کرتے ہوئے اپنا وقت صرف کرتے ہیں۔

پھر وہ مزدلفہ منتقل ہوگئے ، جو مینا اور عرفات کے درمیان ہے اور نماز کے لئے آگے بڑھے۔ صبح کے وقت ، پتھراؤ کی تقریب کے لئے پتھر جمع کریں اور آپ جانتے ہو کہ اس تقریب میں بھیڑ ، تناؤ اور جذباتی ہوسکتا ہے۔ بزرگ ، بیمار اور زخمی افراد کو اس میں حصہ لینے کی حوصلہ شکنی کی جاتی ہے۔ وہ اس میں تاخیر کرتے ہیں اور شام کے بعد اسے انجام دیتے ہیں یا ان کے دوست یا اعتماد رکھتے ہیں کہ وہ یہ رسم ان کی جگہ پر ادا کریں۔

جانوروں کی قربانی

سنگساری کی تقریب انجام دینے کے بعد ، لوگ قربانانی اللہ کو پیش کرتے ہیں یا جانوروں کی قربانی دیتے ہیں اور یہ 10 ، 11 اور 12 ذی الحجہ کو کیا جاسکتا ہے۔

رامی کو چوتھے اور پانچویں دن دہرائیں

آپ کو مینا میں سنگسار کرنے کی رسم میں ضرور حصہ لیا جائے گا لیکن اس بار آپ جمرات الا عقبہ پر پتھر نہیں پھینکیں گے بلکہ دو دیگر یادگاروں جمرات اولہ (پہلا جمرات) اور جمرات وسٹا (درمیانی جمرات) پر ہیں۔

جرمت اولا پر کنکر پھینکیں اور اللہ کی حمد کریں اور اپنے ہاتھوں سے دعا کریں اور آپ کوئی دعا پڑھ سکتے ہیں۔ آپ اسے جمرات وسٹا کے لئے دہرائیں گے اور آخر میں جمرات الا عقبہ پر پتھراؤ کریں گے اور اس کے بعد آپ کو نماز پڑھنے اور گھر واپس آنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

پانچویں دن اتوار کے بعد اس رسم کو دہرائیں۔

آخر میں الوداعی طواف

الوداعی طواف آخری طواف ہے اور سات مرتبہ خانہ کعبہ کے گرد چہل قدمی کریں اور اس آخری دور میں منعکس کریں اور توبہ کریں ، دعا کریں اور تعریف کریں اور اپنے پیاروں کی دعا کریں۔

بعد میں

حج کی ادائیگی کے بعد ، بہت سارے زائرین مدینہ جاتے ہیں ، جو دوسرا مقدس شہر اسلام ہے۔ لوگ مسجد نبوی کے مقدس مقام پر جاسکتے ہیں۔ کسی اہرام کو اس مقدس شہر مدینہ جانے کی ضرورت نہیں ہے۔

غیر ملکی زائرین دس محرم تک سعودی عرب سے چلے جا تے ہیں اور حج آپریشن مکمل ہوجاتا ہے-

Most Popular

Muqabil 26th September 2020 Today by 92 News HD Plus

Muqabil talk show live video telecasted by 92 News HD Plus today on 26th September 2020 can be seen online here soon...

Sawal Yeh Hai 26th September 2020 Today by Ary News

Sawal Yeh Hai talk show live video telecasted by Ary News today on 26th September 2020 can be seen online here soon...

Aiteraz Hai 26th September 2020 Today by Ary News

Aiteraz Hai talk show live video telecasted by Ary News today on 26th September 2020 can be seen online here soon after...

News Beat 26th September 2020 Today by Samaa Tv

News Beat talk show live video telecasted by Samaa Tv today on 26th September 2020 can be seen online here soon after...

Recent Comments